جنگلی ریچھ نے نوجوان کو کھالیا، دل دہلا دینے والا واقعہ

ماسکو : روسی نیشنل پارک میں سیاحوں کی خدمت کرنے والا 16 سالہ لڑکا جنگلی ریچھ کا نوالا بن گیا، سیکیورٹی اہلکاروں نے فائرنگ کرکے ریچھ کو بھی مار ڈالا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق روس کے سایان پہاڑوں پر واقع ایرگائی نیشنل پارک میں سیاحوں کا ایک گروہ پکنک منانے گیا، جن کے ساتھ 16 سال کا مقامی لڑکا بھی بطور خدمت گار ساتھ تھا۔

ایک روزمتاثرہ لڑکا کسی کام سے جنگل میں نکلا تو گھات لگائے بیٹھے ریچھ نے بچے پر حملہ کرکے اسے کھالیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق کافی وقت گزرنے کے بعد بھی بچہ واپس نہ لوٹا تو دو سیاح لڑکے کو تلاش کرنے کیمپ سے باہر نکلے۔

تھوڑے فاصلے پر سیاحوں سے دیکھا کہ ریچھ بچے کو مار کر آدھا جسم کھا چکا ہے، یہ منظر دیکھ کر ایک سیاح نے چاقو سے ریچھ پر حملہ کیا اور جلدی سے کیمپ کی طرف بھاگا تاکہ ایمرجنسی آلارم بجا سکے۔

سائرن کی آواز سن کر نیشنل پارک کے سیکیورٹی اہلکاروں نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر ریچھ کو بھی فائرنگ کرکے مار ڈالا۔

Comments




Source link

About

Check Also

’عراق میں اب امریکا یا کسی غیر ملکی فوج کی ضرورت نہیں‘ –

بغداد: عراقی وزیراعظم مصطفیٰ الکاظمی نے اپنے ملک سے امریکی  و غیر ملکی افواج کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے