عمررسیدہ امریکی نے 90 روز بعد کرونا وائرس کو شکست دے دی

واشنگٹن : معمر شخص نے 90 دن تک زندگی و موت کی کشمکش میں رہنے کے بعد کرونا وائرس کو شکست دینے میں کامیاب ہوگیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ریکی ریاست اوکلاہاما سے تعلق رکھنے والے 75 سالہ رسل اوئنز نامی شخص کو مارچ میں کرونا وائرس کی تشخیص ہوئی تھی جس کے بعد انہیں اسپتال میں قرنطینہ کیا گیا تھا۔

علاج کے دوران معمر شخص کی حالت بگڑی تو انہیں وینٹی لیٹر کر منتقل کردیا گیا تاکہ انہیں مصنوعی سانس فراہم کی جاسکے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ مذکورہ شخص کو اس بات کا علم نہیں وہ کتنے دن تک وینٹی لیٹر پر رہا ہے لیکن یہ ضرور معلوم ہے کہ اس کی اہلیہ بھی کرونا سے متاثر ہوکر وینٹی لیٹر پر چلی گئی تھی۔

دونوں میاں بیوی عمر رسیدہ ہونے کے باعث کوما میں چلے گئے تھے اور ان کی بیٹیوں کو یہ فکر لاحق ہوگئی تھی کہ کہیں کوویڈ 19 ان کے سر سے والدین کا سایہ نہ چھین لے۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ مذکورہ شخص کی بیوی کو وینٹی لیٹر پر منتقل ہونے کے ایک ہفتے بعد ہی زندگی کی بازی ہار گئی تھی تاہم 75 سالہ شخص نے 90 دن وینٹی لیٹر پر رہنے کے بعد وائرس کو شکست دیکر موت سے زندگی کی بازی جیت لی۔

fb-share-icon0

Tweet
20

Comments

comments




Source link

About Raja

Check Also

آسٹریا کے نئے چانسلر کارل نیامر نے حلف اٹھالیا

آسٹریا کے سابق وزیر داخلہ کارل نیامر نے ملک کے نئے چانسلر کی حیثیت سے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *