موبائل صارفین کروڑوں روپے سے محروم –

نئی دہلی : بھارت میں پولیس نے ایک ایسے گروہ کا پتہ لگایا ہے جو لوگوں کو موبائل ایپ کے ذریعے ان کی رقم کو دوگنا کرنے کا لالچ دے کر ان سے رقم ٹھگ لیتا تھا، گروہ کا ایک کارندہ پولیس کے ہتھے چڑھ گیا۔

اتراکھنڈ پولیس نے 250 کروڑ روپے کے اس دھوکہ دہی کے معاملے میں نوئیڈا سے ایک ملزم کو گرفتار کیا ہے۔ حیرت انگیز بات یہ ہے کہ یہ فراڈ صرف 4 ماہ کے عرصے میں کیا گیا تھا۔

ملزم پون پانڈےکے قبضہ سے 19 لیپ ٹاپ، 592 سم کارڈز، 5 موبائل فونز، 4 اے ٹی ایم کارڈز اور ایک پاسپورٹ برآمد ہوا ہے۔ ایس ٹی ایف کی تحقیقات میں یہ بھی انکشاف کہ یہ رقم کرپٹو کرنسی میں تبدیل کرکے بیرون ملک بھیجی جا رہی ہے۔

یہ دھوکہ دہی ایک ایپ کے ذریعہ انجام دی گئی۔ اس ایپ کو ملک کے تقریبا 50 لاکھ افراد نے ڈاؤن لوڈ کیا ہوا ہے۔ اس ایپ کے ذریعے لوگوں کو پندرہ دن میں رقم دوگنا کرنے کا لالچ دیا جاتا تھا۔ دھوکہ دہی میں 15 دن میں پیسہ دگنا کرنے کے لئے پہلے لوگوں سے پاور بینک ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کو کہا گیا، جس کے بعد انہیں پندرہ دن میں دوگنا کرنے کا لالچ دیا گیا۔

دھوکہ دہی کا پردہ فاش اس طرح ہوا کہ ہریدوار کے ایک رہائشی نے پولیس کو اطلاع دی کہ اس نے مذکورہ ایپ کے ذریعے رقم دوگنا کرنے کے لئے بالترتیب 93 ہزار اور 72 ہزار جمع کروائے تھے، 15 دن میں اسے دوگنی رقم واپس کرنے کا وعدہ کیا گیا تھا۔

لیکن جب ایسا نہیں ہوا تو متاثرہ شخص نے تھانے میں شکایت درج کرائی، جس پر پولیس نے مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی۔ تفتیش سے معلوم ہوا کہ رقوم مختلف کھاتوں میں منتقل کردی گئی ہے۔ جب مالیاتی لین دین کا مطالعہ کیا گیا تو پولیس کو 250 کروڑ روپے کی بدعنوانی کا علم ہوا۔

Comments




Source link

About

Check Also

اے ٹی ایم سے 20 ڈالرز نکالنے والی خاتون کے پیروں تلے زمین نکل گئی، حیران کن واقعہ –

امریکی ریاست فلوریڈا سے تعلق رکھنے والی خاتون اپنے اکاؤنٹ سے 20 ڈالرز رقم نکالنے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے