فن و ثقافت

ٹریفک حادثے میں‌ جاں‌ بحق ہونے والی شاعرہ کے والد کے نام خطوط –

فروغ فرخ زاد کا فن ہی نہیں ان کی زندگی بھی روایت اور کسی بھی معاشرے کی اس ڈگر سے ہٹ کر بسر ہوئی جس پر چلنے والے کو “باغی” کہا جاتا ہے۔ 1934ء میں‌ ایران کے قدیم و مشہور شہر تہران میں آنکھ کھولنے والی فروغ فرخ زاد نے …

Read More »

آفتاب نے شبنم سے کیا کہا؟ –

آخر چمن سے نگہتِ گُل کر گئی سفرخانہ بدوش کو نہیں الفت وطن کے ساتھ جب صبح کے وقت شبنم آفتاب کے سلام کے لیے حاضر ہوئی تو آفتاب نے کہا، کیوں ری ہرجائی، ہری چُگ تُو رات بھر عالمِ سفلی کی سیر کرتی ہے، اور نئے نئے تماشے دیکھتی …

Read More »

صاحبِ اسلوب ادیب مختار مسعود کی ایک تصویر کا ماجرا –

’’آوازِ دوست‘‘ کا انتساب کچھ یوں تھا: ’’پرِ کاہ اور پارۂ سنگ کے نام وہ پرِ کاہ، جو والدہ مرحومہ کی قبر پر اُگنے والی گھاس کی پہلی پتّی تھی اور وہ پارۂ سنگ جو والد مرحوم کا لوحِ مزار ہے۔‘‘ آوازِ دوست وہ کتاب تھی جس نے ادبی دنیا …

Read More »

"چوری چکاری سیکھو اور جو ہاتھ آئے اس میں دوسروں کو شریک کرو!” –

آج پاکستان اور یہاں‌ کے عوام کو جن مسائل اور معاشرتی خرابیوں کا سامنا ہے، اور لوگ کرپٹ نظام کے ساتھ ملک کے بالا دست اور بااختیار طبقے کی من مانیوں اور خود پر ہونے والی زیادتیوں کو جھیل رہے ہیں، مراکش کے عوام بھی کچھ ایسے ہی حالات کا …

Read More »

ہندوستان کے شاہی خاندان کا بدنصیب ماہِ عالم –

ماہِ عالم ایک شہزادے کا نام تھا، جو شاہِ عالم بادشاہِ دلّی کے نواسوں میں تھا اور غدر میں اس کی عمر گیارہ برس کی تھی۔ شہزادہ ماہِ عالم کے باپ مرزا نو روز حیدر دیگر خاندانِ شاہی کی طرح بہادر شاہ کی سرکار سے سو روپے ماہوار تنخواہ پاتے …

Read More »

اردو کے بارے میں گنوار کی رائے –

فراق گورکھپوری ایک عہد ساز شاعر اور نقّاد تھے۔ اردو زبان کے جن شعرا نے جدید شاعری میں اپنی انفرادیت کے سبب جو شہرت اور مقبولیت سمیٹی، ان میں فراق کا نام سرِ فہرست ہے۔ فراق کے بارے میں‌ ڈاکٹر خواجہ احمد فاروقی کا کہنا ہے کہ، اگر فراق نہ …

Read More »

پاکستان ٹیلی ویژن کے معروف اداکار جمیل فخری کی برسی –

آج پاکستان ٹیلی ویژن کے نام وَر اداکار جمیل فخری کی برسی ہے۔ وہ 9 جون 2011ء کو اس دنیا سے ہمیشہ کے لیے رخصت ہوگئے تھے۔ جمیل فخری پی ٹی وی کے اُن فن کاروں‌ میں سے ایک ہیں جو ‘جعفر حسین’ کے نام سے آج بھی مداحوں کے …

Read More »

پہچانو میں‌ کون! عادل اسیر دہلوی کی دل چسپ منظوم پہیلی –

عادل اسیر دہلوی کا نام ہندوستان کے ان تخلیق کاروں‌ میں‌ اہم اور نمایاں ہے جنھوں نے بچّوں کے ادب کو متنوع موضوعات سے مالا مال کیا اور ان کے لیے سادہ و دل نشین انداز میں نہ صرف کہانیاں لکھیں بلکہ آسان اور عام فہم شاعری بھی کی۔ 1959ء …

Read More »

سیفو، یونان کی نام وَر شاعرہ جو بہت بدنام بھی ہے! –

سرزمینِ یونان کو گہوارۂ علم و حکمت کہا جاتا ہے۔ قدیم تہذیبوں، ثقافتی تنوع اور رنگارنگی کے لیے مشہور یونان میں نہ صرف علم و ادب پروان چڑھا بلکہ اس سرزمین نے حُسن و عشق کی لازوال داستانوں کو بھی جنم دیا جنھیں آج بھی دہرایا جاتا ہے۔ دنیا تسلیم …

Read More »

"میل خوردہ قالین خرید لیا گیا…” –

ایک روز شہاب صاحب کی اپنی بیگم سے قالین خریدنے کے معاملے پر تکرار ہوگئی۔ شہاب صاحب سفید قالین خریدنا چاہتے تھے جب کہ بیگم کو اعتراض تھا۔ وہ لکھتے ہیں: “عفّت اٹھ کر بیٹھ گئی اور استانی کی طرح سمجھانے لگی۔ ہمارے ہاں ابنِ انشا آتا ہے، پھسکڑا مار …

Read More »